بریکنگ نیوز / سعودی ولی عہد پر قاتلانہ حملہ / مکمل خبر اسلام ٹائمز پر ملاحظہ کریںلاپتہ افراد کے حق میں آواز اُٹھانا جُرم بن گیا، ایم ڈبلیو ایم کے مرکزی ڈپٹی سیکرٹری جنرل ناصر شیرازی کو اغواء کر لیا گیاانتظامیہ زائرین کو بنیادی سہولیات بھی فراہم کرنے سے قاصر ہے، اس راستے کو کسی صورت نہیں چھوڑینگے، علامہ ساجد نقویافغانستان، پاک افغان سرحد کے قریب ڈرون حملہ، 12 افراد ہلاککرم ایجنسی، پاک افغان سرحدی علاقہ غوزگڑی میں امریکی ڈرون حملہ، اب تک کوئی جانی نقصان کی اطلاع نہیں ملی، ابتدائی رپورٹ"محبین اہلبیت (ع) اور تکفیریت" بین الاقوامی کانفرنس کیلئے مقالات کی کالامریکی ڈرون حملہ /شام میں حزب اللہ کے ۸ کمانڈو شہیددمشق المیدان اسکوائر میں خودکش دھماکہ / ۱۰ افراد شہید ۲۰ مجروحکابل میں امام بارگاہ کے قریب خودکش دھماکہ، 6 افراد جاں بحق اور متعدد زخمیکابل میں مسجد شیعیان پر دہشت گردوں کا حملہ / ۶ شہید ۳۳ زخمی
 
 
 

بعثت پیامبر (ص) کے اہداف و مقاصد

سفر گریہ

سفرِ عشق جاری ہے!

نجف سے کربلا۔۔۔ میں نے اسے کہا

زیارت امام حسین(ع)۔۔۔۔ گر تو برا نہ مانے

ایام عزا اور نجات دہندہ بشریت

امام زین العابدین کی حیات طیبہ کا اجمالی تذکرہ

امام صادق (ع) کا مقام امام ابو حنیفہ کی زبانی

استقبال ماہ رمضان المبارک

کن فیکن

حکومت، اسکے تقاضے اور موجودہ حکمران

زیارات معصومینؑ کی مخالفت، ذہنی فتور ہے

دینی مدارس، غلط فہمیاں اور منفی پروپیگنڈہ

شناخت مجهولات کا منطقی راستہ

انسان کی شخصیت میں دوست کا کردار

اقبال اور تصورِ امامت (1)

روزے کا فلسفہ، چند معروضات

قیام امام حسینؑ کی اہمیت غیر مسلم دانشوروں کی نظر میں

امام حسین (ع) کے بارے میں آئمہ معصومین علیہم السلام کے ارشادات

تاریخ بشریت کا چمکتا ستارہ

فضیلت حضرت علیؑ غیر مسلم دانشوروں کی نظر میں

علی کی شیر دل بیٹی

حضرت فاطمۃالزہرا (س) بحیثیت آئیڈیل شخصیت

حضرت علی المرتضٰی۔ؑ ۔۔۔ شمعِ رسالت کا بےمثل پروانہ

زہراء (س) کیا کرے!

عظمت حضرت زہرا (س) غیر مسلم دانشوروں کی نظر میں

وہ جو اصلِ لفظ بہار ہے

انقلاب حسين بزبان حضرت امام حسين (ع)

محبت اہل بیت (ع)

 
نیوز لیٹر کیلئے اپنا ای میل ایڈریس لکھیں.
 
 
Thursday 17 August 2017 - 11:42
Share/Save/Bookmark
تفتان بارڈر پر زائرین کیساتھ توہین آمیز رویہ افسوسناک ہے، مزید برداشت نہیں کریں گے، سبطین سبزواری
تفتان بارڈر پر زائرین کیساتھ توہین آمیز رویہ افسوسناک ہے، مزید برداشت نہیں کریں گے، سبطین سبزواری
 
 
ایس یو سی پنجاب کے صدر کا کہنا تھا کہ ملت جعفریہ کے صبر کا پیمانہ لبریز ہو چکا ہے، شاید نااہل عناصر کو تاریخ کا علم نہیں کہ بنو اُمیہ اور بنو عباس کی حکومتیں آئمہ اہلبیت علیہم السلام کے مزارات مقدسہ پر زیارات کا راستہ روکنے میں ناکام رہیں اور اب کوئی ان کا اچھے لفظوں میں نام لینے تیار نہیں، تو موجودہ حکومتیں بھی زیارت کربلا و نجف کو روکنے میں ناکام ہوں گی۔ شیعہ علما کونسل کے رہنما نے متنبہ کیا کہ ہمیں انتہائی اقدام پر مجبور نہ کیا جائے کہ حکومت کیلئے حالات سنبھالنا مشکل ہو جائیں گے۔
 
اسلام ٹائمز۔ شیعہ علماء کونسل پنجاب کے صدر علامہ سید سبطین حیدر سبزواری نے کہا ہے تفتان بارڈر پر عراق اور ایران سے آنیوالے زائرین کو سازش کے تحت بلاوجہ تنگ کیا جا رہا ہے، اس توہین آمیز رویے کو مزید برداشت نہیں کیا جائے گا، ہم نہیں چاہتے کہ ملک اور ریاست کیلئے مشکلات پیدا کریں، بہتر ہے متعصبانہ رویہ تبدیل کیا جائے۔ لاہور میں وفد سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے افسوس کا اظہار کیا کہ زائرین کا مسئلہ ناقابل برداشت حد تک اپنی انتہا کو پہنچ چکا ہے، بار بار متوجہ کیا گیا مگر لگتا ہے کہ متعلقہ ادارے اور حکومتیں بے ہوشی میں ہیں، جنہیں شہریوں کے مسائل نظر نہیں آ رہے، تفتان بارڈر پر پاکستان ہاؤس کو زائرین کا قید خانہ بنا دیا گیا ہے، جہاں بیٹھنے کی جگہ ہے، پینے کا ٹھنڈا پانی ہے اور نہ ہی بنیادی ضروریات زندگی کا سامان، لوگ واش رومز کا پانی پینے پر مجبور ہیں، خواتین اور بچوں کو قیدی بنا کر رکھا گیا ہے، ٹرانسپورٹ مہیا نہیں کی جاتی اور یہ رویہ جاتے اور آتے روا رکھا جاتا ہے۔

ان کا کہنا تھاکہ ملت جعفریہ کے صبر کا پیمانہ لبریز ہو چکا ہے، شاید نااہل عناصر کو تاریخ کا علم نہیں کہ بنو اُمیہ اور بنو عباس کی حکومتیں آئمہ اہلبیت علیہم السلام کے مزارات مقدسہ پر زیارات کا راستہ روکنے میں ناکام رہیں اور اب کوئی ان کا اچھے لفظوں میں نام لینے تیار نہیں، تو موجودہ حکومتیں بھی زیارت کربلا و نجف کو روکنے میں ناکام ہوں گی۔ شیعہ علما کونسل کے رہنما نے متنبہ کیا کہ ہمیں انتہائی اقدام پر مجبور نہ کیا جائے کہ حکومت کیلئے حالات سنبھالنا مشکل ہو جائیں گے، زیارات کیلئے اس راستے کو جاری رکھیں گے اور کسی صورت پیچھے نہیں ہٹیں گے، حکومت زائرین کی واپسی اور ان کی سہولیات کا اہتمام کرے، اور مستقل بنیادوں پر اس مسئلے کو حل کیا جائے، جو کہ حکومت اور ریاستی اداروں کی ذمہ داری ہے۔ علامہ سبطین سبزواری نے چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ، وزیر داخلہ احسن اقبال اور وزیر اعلیٰ بلوچستان ثنا اللہ زہری سے مطالبہ کیا کہ وہ زائرین کے مسئلے کو ترجیحی بنیادوں پر حل کریں۔
 
خبر کا کوڈ: 661946