پاراچنار بڑی تباہی سے بچ گیا، افغانستان سے آنے والی بارود سے بھری گاڑی پر بورکی بارڈر کے قریب فورسز کی فائرنگ، گاڑی دھماکے سے تباہکرم ایجنسی کے قریب افغانستان کے علاقے نری کنڈوں پر امریکی جیٹ طیاروں کی بمباری 16 افغان طالبان ہلاک، کئی شدید زخمی، افغان ذرائعپاراچنار بم دھماکے کا ایک اور زخمی کفایت حسین شہید ہوگیا، یوں بم دھماکے کے شہداء کی تعداد 26 ہوگئیپاراچنار، افغانستان کی سرحدی علاقے سے پاراچنار کے نواحی علاقوں پر یکے بعد دیگرے دو میزائل فائرپارا چنار پھر لہو لہو، امام بارگاہ کے قریب زوردار دھماکہ، خواتین و بچوں سمیت 22 افراد شہید، 55 سے زائد زخمیپاراچنار، دھماکہ کیخلاف احتجاج کرنیوالے مظاہرین پر فورسز کی فائرنگ، 2 افراد شہید، 9 زخمیپاراچنار، پاک افغان سرحد پر متھہ سنگر کے قریب ڈرون حملہ، متعدد ہلاکتوں کی اطلاعہر دور کے حکمرانوں نے سرائیکی وسیب کی محروم عوام کا استحصال کیا، کالعدم جماعتوں کیخلاف کارروائی نہ ہونیکے برابر ہے، علامہ ناصر عباسلودھراں کے قریب 2 رکشے ٹرین کی زد میں آگئے، 7 بچوں سمیت 8 افراد جاں بحقکراچی، فرید اور زکریا ایکسپریس میں تصادم، 17 افراد جاں بحق، ریسکیو کا کام جاری
 
 
 
 
 
 
نیوز لیٹر کیلئے اپنا ای میل ایڈریس لکھیں.
 
 
Thursday 12 January 2017 - 00:25
Share/Save/Bookmark
ہم نے 2016ء میں 3 کروڑ 69 لاکھ روپے کا جرمانہ کرکے قومی خزانہ میں جمع کروایا، انسپکٹر ابراہیم خان
ہم نے 2016ء میں 3 کروڑ 69 لاکھ روپے کا جرمانہ کرکے قومی خزانہ میں جمع کروایا، انسپکٹر ابراہیم خان
 
 
ٹریفک پولیس ضلع بنوں کے انچارج کا میڈیا سے گفتگو میں کہنا تھا کہ عوام کے تعاون کے بغیر ٹریفک پولیس اپنا کام صحیح طریقے سے سرانجام نہیں دے سکتی، اس لئے ٹریفک پولیس اور عوام ایک دوسرے کیلئے لازم و ملزوم ہیں۔
 
اسلام ٹائمز۔ ٹریفک پولیس ضلع بنوں کے انچارج انسپکٹر ابراہیم خان نے میڈیا کے نمائندوں کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے 2016ء میں 3 کروڑ 69 لاکھ روپے کا جرمانہ کرکے قومی خزانہ میں جمع کروایا اور ایک ماہ میں مزید 49 لاکھ روپے کا جرمانہ کرکے خزانہ میں داخل کیا گیا ہے۔ بنوں میں ٹریفک کے نظام کو درست کرنے کیلئے ٹھوس اقدامات کئے جا رہے ہیں۔ جس میں ٹریفک اصولوں کی خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف سخت ایکشن لیا جائے گا۔ بنوں میں ٹریفک پولیس، گاڑیوں کی کمی اور دیگر مسائل کی وجہ سے کچھ مشکلات ہیں، لیکن ہم ٹریفک نظام کو درست کرنے کیلئے دن رات کوشش کر رہے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انسپکٹر ابراہیم خان نے تفصیلات بتاتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ بنوں میں کم عمر بچے رکشے وغیرہ چلاتے ہیں، رکشہ کے ذمہ داران کو چاہیئے کہ وہ ٹریفک کے قوانین کا مکمل احترام کریں، کسی کو بھی ٹریفک نظام کی خلاف ورزی کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی اور اس کیلئے ڈی ایس پی ہیڈ کوارٹر عقیق حسین کی نگرانی میں ٹھوس اقدامات کئے جا رہے ہیں۔ بنوں شہر میں مختلف روٹس کو ون وے مقرر کیا گیا ہے۔ انہوں نے عوام اور ٹرانسپورٹرز سے اپیل کی کہ وہ ٹریفک پولیس کے ساتھ مکمل تعاون کریں۔ انہوں نے مزید کہا کہ عوام کے تعاون کے بغیر ٹریفک پولیس اپنا کام صحیح طریقے سے سرانجام نہیں دے سکتی، اس لئے ٹریفک پولیس اور عوام ایک دوسرے کے لئے لازم و ملزوم ہیں۔ انہوں اس پر بھی افسوس کا اظہار کیا کہ بنوں میں سڑکوں کے تنگ ہونے کی وجہ سے رکشے، ٹرک، ڈاٹسن، فلائنگ کوچ اور بڑی بڑی گاڑیوں کی بھرمار سے سڑک پر ٹریفک کے نظام میں خلل پڑتا ہے، لیکن ان شاء اللہ ہم ٹریفک کے نظام کو درست کرنے کیلئے سخت انتظامات کریں گے۔
 
خبر کا کوڈ: 599290