پاراچنار بم دھماکے کا ایک اور زخمی کفایت حسین شہید ہوگیا، یوں بم دھماکے کے شہداء کی تعداد 26 ہوگئیپاراچنار، افغانستان کی سرحدی علاقے سے پاراچنار کے نواحی علاقوں پر یکے بعد دیگرے دو میزائل فائرپارا چنار پھر لہو لہو، امام بارگاہ کے قریب زوردار دھماکہ، خواتین و بچوں سمیت 22 افراد شہید، 55 سے زائد زخمیپاراچنار، دھماکہ کیخلاف احتجاج کرنیوالے مظاہرین پر فورسز کی فائرنگ، 2 افراد شہید، 9 زخمیپاراچنار، پاک افغان سرحد پر متھہ سنگر کے قریب ڈرون حملہ، متعدد ہلاکتوں کی اطلاعہر دور کے حکمرانوں نے سرائیکی وسیب کی محروم عوام کا استحصال کیا، کالعدم جماعتوں کیخلاف کارروائی نہ ہونیکے برابر ہے، علامہ ناصر عباسلودھراں کے قریب 2 رکشے ٹرین کی زد میں آگئے، 7 بچوں سمیت 8 افراد جاں بحقکراچی، فرید اور زکریا ایکسپریس میں تصادم، 17 افراد جاں بحق، ریسکیو کا کام جاریچوہدری نثار نے اپنی پریس کانفرنس کو مزید مشکوک کر دیا، جلسے کی اجازت نہیں تھی تو سکیورٹی کیوں دی گئی؟ ملک عامر ڈوگرحکمران اور سیاستدان بردباری کا مظاہرہ کریں، ملک مزید کسی بحران کا متحمل نہیں ہوسکتا، علامہ ساجد نقوی
 
 
 
 
 
 
نیوز لیٹر کیلئے اپنا ای میل ایڈریس لکھیں.
 
 
Wednesday 11 January 2017 - 21:53
Share/Save/Bookmark
مخلوق خدا کے امن کے قیام کیلئے جدوجہد وقت کا تقاضا ہے، گورنر کے پی کے
مخلوق خدا کے امن کے قیام کیلئے جدوجہد وقت کا تقاضا ہے، گورنر کے پی کے
 
 
اقبال ظفر جھگڑا کا گورنر ہاؤس میں قومی امن کمیٹی کے وفد سے ملاقات میں کہنا تھا کہ بین المذاہب ہم آہنگی کو فروغ دےکر ہی ملکی و بین الاقوامی سطح پر امن کا قیام یقینی بنایا جاسکتا ہے۔
 
اسلام ٹائمز۔ گورنر خیبر پختونخوا انجینئر اقبال ظفر جھگڑا نے کہا ہے کہ بین المذاہب ہم آہنگی کو فروغ دے کر ہی ملکی و بین الاقوامی سطح پر امن کا قیام یقینی بنایا اور انسانیت کو درپیش چیلنجز کا مقابلہ کیا جا سکتا ہے۔ وہ بدھ کو گورنر ہاؤس پشاور میں قومی امن کمیٹی برائے بین المذاہب ہم آہنگی کے ایک وفد سے ملاقات کر رہے تھے۔ وفد کی قیادت قومی امن کمیٹی کے چیئرمین علامہ مولانا محمد شعیب کر رہے تھے، جبکہ وفد میں مختلف مکتبہ فکر کے علماء و مشائخ اور مختلف مذاہب سے تعلق رکھنے والے افراد شامل تھے۔ مولانا شعیب نے گورنر کو امن کمیٹی کی سرگرمیوں اور اغراض و مقاصد سے آگاہ کیا۔ گورنر نے بین المذاہب ہم آہنگی کے فروغ کیلئے قومی امن کمیٹی کی کوششوں کو سراہا، انہوں نے کہا کہ مخلوق خدا کے امن کے قیام کیلئے جدوجہد وقت کا تقاضا ہے اور اس میں رب کی رضا بھی ہے۔
 
خبر کا کوڈ: 599256